Donate Now
مشترک امور کی بنیادوں پر تمام ہندوستانیوں کا اتحاد ممکن

مشترک امور کی بنیادوں پر تمام ہندوستانیوں کا اتحاد ممکن

توحید اور انسانیت تمام مذاہب میں مشترک ہے : خانقاہ عارفیہ میں منعقدقومی یکجہتی کانفرنس میں سوامی اگنی ویش کا اظہار خیال

خانقاہ عارفیہ ، سید سراواں، الٰہ آباد

ہندوستان کی گنگا جمنی تہذیب یہاں کےصوفیوں اور سنتوں کی دین ہے ۔ انھوںنے اس سرزمین پر امن ومحبت ، رواداری ومساوات، میل ملاپ اور بین الاقوامی سطح پر قومی یکجہتی کادرس دیا ہے ، جو ملک کی اجتماعی سالمیت وحفاظت ، امن وامان اور ترقی کے لیے ناگزیر تھا۔آج جب کہ غیر امن پسندلوگ دین ومذہب کے نام پر ملک میں فساد وآتنک پھیلانے اور ملک کی امن وشانتی کا گلا گھونٹنے میں سرگرداںہیں ،ایسے حالات میں ضروری ہے کہ قوم ومذہب کے حقیقی نمائندگان ایک بارپھر وحدت میں کثرت اور کثرت میں وحدت کا نعرہ لگائیں اور ملک کی ترقی واصلاح اور شانتی کے لیے ملکی سطح پر بین المذاہب وبین المسالک اتحاد ویکجہتی کی فضا قائم کریں ، تاکہ ہمارا ملک اپنی عظمتِ رفتہ اور شوکتِ گم گشتہ کے ساتھ دوبارہ اٹھ کھڑا ہو۔ ان خیالات کا اظہار خانقاہ عارفیہ، سید سراواںالٰہ آباد میں جشنِ مولائے کائنات کے موقع پر منعقد قومی یکجہتی کانفرنس میں شریک اربابِ علم ودانش نے کیا۔