دینے والا ہاتھ لینے والے ہاتھ سے بہتر ہے

0
25

حضور داعی اسلام ادام اللہ ظلہ علینا طالبین اور سالکین کے انجمن میں جلوہ افروز تھے، گفتگو جاری تھی، درمیان میں ایک طالب علم نے عرض کیا کہ حضوراليَدُ العُلْيَا خَيْرٌ مِنَ اليَدِ السُّفْلَى( دینے والا ہاتھ لینے والے ہاتھ سے بہتر ہے۔بخاری) کا کیا مطلب ہے؟ جب کہ عطیات وصدقات لینے والوں میں ہم بعض متقی حضرات کو بھی پاتے ہیں جو اپنی ضرورت کے مطابق لیتے ہیں جب کہ دینے والوں میں غیر متقی حضرات بھی ہوتے ہیں۔
 آپ نے ارشاد فرمایا : دینے والا اس لیے افضل ہے کہ دنیا اس کے ہاتھ سے نکل رہی ہےاور جس قدر دنیا اس کے ہاتھ سے نکل رہی ہے،وہ اسی قدر صفت فقر سے آراستہ ہو رہا ہے، اللہ کا محتاج بن رہا ہے اور اسی قدر وہ بخل کے مرض سے بھی نجات پا رہا ہے، اس وقت وہ تارک الدنیا ہے اور یہ اللہ کو پسند ہے ۔

 (خضرراہ ،ستمبر۲۰۱۳ء)
Previous articleانسان کے درجات
Next articleناظم اور صدر کیسا ہو؟
اڈمن
الاحسان میڈیا اسلامی جرنلزم کا ایک ایسا پلیٹ فارم ہے جہاں سے خالص اسلامی اور معتدل نقطۂ نظر کی ترویج و اشاعت کو آسان بنایا جاتا ہے ۔ساتھ ہی اسلامی لٹریچرز اور آسان زبان میں دینی افکار و خیالات پر مشتمل ڈھیر سارے علمی و فکری رشحات کی الیکٹرانک اشاعت ہوتی ہے ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here